انٹر بینک میں ڈالر کی اونچی اڑان،اوپن مارکیٹ میں ڈالر ۱۹۰ روپے کا ہوگیا

11 May,2022

 

موجودہ  حکومت پاکستانی روپے کی بے قدری اور  ڈالر کی اونچی اڑان کو روکنے  میں   ناکام ہو گئی ہے۔ امریکی ڈالر تاریخ  کی بلند ترین سطح پر پہنچ گیا۔انٹر بینک میں ڈالر کی قیمت میں  ۸۲  پیسے اضافہ ہونے سے ڈالر ۱۸۸  روپے ۳۵ پیسے پر پہنچ گیا  جبکہ  اوپن مارکیٹ میں ڈالر کی قیمت  ۱۹۰روپے ہو چکی ہے۔  آج  کے دن ڈالر ایک اعشاریہ ۱۳ روپے مہنگا ہوچکا ہے۔

 

رواں مالی سال میں ڈالر  کے مقابلے میں روپے کی قدر میں ۱۹ فیصد ہوا۔یاد رہے کہ  ۷ اپریل کو انٹر بینک میں ڈالر کی قیمت ۱۸۸ روپے تھی جبکہ ۱۶ اپریل کو انٹر بینک میں ڈالر کی قیمت  ۱۸۱ روپے ۵۵ پیسے  تھی مگر اب ڈالر کی قیمت ۷ روپے بڑھ کر ۱۸۹ روپے ہو چکی ہے اس کے برعکس اوپن مارکیٹ میں ڈالر کی قیمت ۱ روپے مہنگی ہونے سے اب ڈالر ۱۹۰ کا فروخت ہو رہا ہے۔

 

ماہرین نے ڈالر کے مقابلے میں روپے کی مسلسل کمی کا ذمہ دار آئی ایم  ایف سے بات چیت نہ کرنے کو ٹھہرایا ہے۔

 

ایکس چینج کمپنیز  ایسوسی ایشن آف پاکستان کے جنرل سیکرٹری ظفر پراچہ کے مطابق   پاکستان کی معیشت کو کئی خطرات لاحق ہیں ۔ڈالر کی   قیمت میں   مسلسل اضافہ  تشویشناک ہے کیونکہ  ڈالر  کے صرف ایک روپے  مہنگا ہونے سے  بیرونی قرضوں میں کئی حد تک اضافہ ہو  جاتا ہے۔

 

Share This Article